کیا کسی نامحرم کی آواز ماضی اور حال کے اعتبار سے سننے میں کوئی فرق ھے ؟

0 0


سائٹ کے کوڈ
fa3280


کوڈ پرائیویسی سٹیٹمنٹ
11749

کیا کسی نامحرم کی آواز ماضی اور حال کے اعتبار سے سننے میں کوئی فرق ھے ؟

ماضی میں ، عورتوں سے کیوں کھا جاتا تھا که آپ کی آواز نا محرم نه سنیں ، لیکن آج کل ٹی وی اور ریڈیو پر قرآن مجید کی تلاوت اور ذاکری کی صورت میں عورتوں کی آوازیں بڑی آسانی کے ساتھ نشر ھوتی ھیں ۔ کیا ماضی اور حال کے حکم میں کوئی فرق ھے ؟

دیگر زبانوں میں (ق) ترجمہ

مزید  میں نے ایک شخص کا لباس کار پہنا، اس کی جیب میں کچھ پیسے تھے، میں نے ان پیسوں کو خرچ کر ڈالا، اس شخص کو تلاش کرنا میرے لیے مشکل ہے، اب میں کیا کروں؟
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.