شیاطین کو سنگسار کرنے سے مراد (جوقرآن مجید میں آیا ھے) کیا ھے؟

0 0


سائٹ کے کوڈ
fa4470


کوڈ پرائیویسی سٹیٹمنٹ
12485

شیاطین کو سنگسار کرنے سے مراد (جوقرآن مجید میں آیا ھے) کیا ھے؟

قرآن مجید، ستاروں کی خلقت کی علت بیان کرتے ھوئے ھمارے علم میں اضافه کرتا ھے اور ارشاد فرماتا ھے:
” ھم نے آسمانوں کو چراغوں سے معین کیا ھے اور انھیں شیطان کو سنگسار کرنے کا ذریعه بنا دیا ھے اور ان کے لئے جھنم کا عذاب الگ مھیا کر رکھا ھے ۔“ سوره ملک آیت ۵
سوره صفات، آیت ۶۔۔۔ ۸: ” بیشک ھم نے آسمان دنیا کو ستاروں سے مزیٌن بنادیا ھے ۔ اور انھیں ھر سرکش شیطان سے حفاظت کا ذریعه بنادیا ھے ۔ که اب شیاطین عالم بالا کی باتیں سننے کی کوشش نھیں کرسکتے اور وه ھر طرف سے مارے جائیں گے ۔” سوره صفات، آیت ۶۔۔۔ ۸
خداوند متعال نے شھاب کو پیدا کیا ھے تاکه انھیں میزائیلوں کے مانند شیاطین کے خلاف استعمال کیا جائے ۔ شیاطین کو سنگسار کرنے سے مراد کیا ھے؟

دیگر زبانوں میں (ق) ترجمہ

مزید  حضرت علی(ع) نے،پیغمبر(ص) کی وصیت لکهنے کی خواهش میں رکاوٹ ایجاد کرنے پر کیوں مخالفت نهیں کی؟
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.