حضرت فاطمہ معصومہ (س) کا قم المقدس میں ورود اوراستقبال

0 1

 

حضرت معصومہ (س) پہلی ذیقعدہ سنہ 173ھ۔ق۔ مدینہ منورہ میں پیدا ہوئیں حضرت معصومہ (س) کے والد گرامی شیعوں کے ساتویں امام موسی کاظم(ع) ہیں اور ان کی والدہ ماجدہ جناب نجمہ خاتون ہیں جب امام رضا(ع)  پیدا ہوئے تو ان کی والدہ کو طاھرہ کے نام سے بلایا گیا پہلی ذیقعدہ کا دن امام رضا(ع)  کیلئے بہت بڑادن تھا اور اس دن بڑی انتظار کا خاتمہ ہوا اس لئے کہ جناب نجمہ خاتون کے ایک ہی فرزند جناب امام رضا(ع)  تھے اور وہ بہت عرصے تک صاحب اولاد نہ ہوئیں اس لئے کہ جناب امام رضا(ع)  سنہ 148ھ۔ ق۔ میں پیدا ہوئے لیکن جناب معصومہ(س)   173ھ۔ق۔ پیدا ہوئیں یعنی 25سال کہ  فاصلے کہ بعداور امام موسی کاظم(ع)  کی اولاد میں سے کوئی بھی ہم مرتبہ امام رضا(ع)  نہیں تھا تا کہ  امام(ع)  برادرانہ محبت کا واضح اظہار کرسکیں لہذا جب حضرت معصومہ(س)  پیدا ہوئیں تو امام رضا (ع) کو ایک بڑی عظمتوں والی بہن مل گئی دنیا میں بہت سے ایسے بہن بھائی ہیں جو ایک دوسرے کو جان سے زیادہ دوست رکھتےتھے سب سے بڑا نمونہ جناب زینب(س)  اور امام حسین (ع)   اور اس کے بعد جناب معصومہ(س)  اور امام رضا (ع)   کا ہے

جب مامون نےامام رضا(ع) کو سنہ 200 ھ۔ق۔ میں مدینے سے بلایا توحضرت معصومہ(س)  نےایک سال تک اپنے بھائی کی دوری برداشت کی  لیکن ایک سال  کے بعد تاب تحمل نہ رہا اوراپنے بھائی کے دیدار کیلئے مدینہ طیبہ کو ترک کیا اور مرو کی طرف روانہ ہوئیں  اس سفر میں حضرت معصومہ کے پانچ بھائی ‘ فضل، جعفر، ہادی، قاسم اور زید اور کچھ بھتیجے اور چند غلام اور کنیزیں ان کے ہمراہ تھے

مزید  اہلِ سنت ، شیعوں کی نظر میں

حضرت معصومہ(س)  کی بیماری 

جب حضرت معصومہ(س)  ساوہ پہونچیں تو اہل بیت رسول اکرم کے دشمن مامون کے حکم سے ان کے راستے پر کھڑے ہو گئے اور اس کاروان کے اکثر مردوں کو شہید کردیا

 حضرت معصومہ(س)  شدت غم اور بعض روایات میں ہے کہ مسمومیت کے بنا پر بیمار ہوگئیں اور ان میں تاب سفر نہ رہا

حضرت فاطمہ معصومہ (س) کا قم المقدس میں ورود اوراستقبال

23ربیع الاول سنہ 201ھ۔ق۔ کا وہ مبارک اور مسعود دن ہے جب جناب معصومہ(س)  قم میں وارد ہوئیں اور شہر قم کے سب مرد اور عورتیں ، بچے اور بوڑھے  ان کے والہانہ استقبال کیلئے  جمع ہوئے  جناب معصومہ (س) کی سواری موسی بن خزرج کے دروازے پر رک گئی اورموسی بن خزرج کو یہ توفیق نصیب ہوئی کہ وہ 17 دن تک جناب معصومہ(س)  کے میزبان رہے

 

 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.