بدترين طريقے كا سہارا

0 8

بدترين طريقے كا سہارا

حارث بن نضر كا شمار اميرالمومنين حضرت على (ع) كے اصحاب ميں ہوتا تھا عمروعاص كو ان سے خاص دشمنى تھى او ر شايد ہى كوئي ايسى مجلس ہو جس ميں حارث كى برائي نہ كرتا ہو حارث نے بھى عمروعاص كے متعلق كچھ شعر كہے اور اس كے پاس بھيجديئے ان اشعار ميں اسے يہ اشتعال دلايا گيا تھا كہ اگر نيك نام اور كار خير كى تمنا ہے تو على بن ابى طالب كے مد مقابل آجاؤ_

ان اشعار كو پڑھ كر عمروعاص نے قسم كھائي كہ على (ع) سے ضرور زور آزمائي كروں گا چاہے ہزار مرتبہ موت كا سامنا كرنا پڑے يہ كہہ كر وہ ميدان كارزار ميں آيا حضرت على (ع) بھى اس كى جانب بڑھے حضرت على (ع) كو ديكھ كر عمروعاص پر ايسا خوف طارى ہوا كہ اس نے خود كو گھوڑے سے زمين پر گرا ديا اور شرمگاہ كھول دى حضرت على (ع) نے منھ پھير ليا تو عمروعاص نے راہ فرار اختيار كي_ 

مزید  مارقين
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.