ہندوستان میں ہندو دہشت گردی کی تربیت

ہندوستان کے مرکزی وزیر داخلہ سشیل کمار شندے نے کہا ہے کہ بی جے پی اور آر ایس ایس ہندو دہشت گردی کو فروغ دے رہے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق سشیل کمار شندے نے آج جے پور میں کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی، بی جے پی، اور راشٹریہ سویم سیوک سنگھ، آر ایس ایس، ہندو دہشت گردی کو فروغ دے رہے ہیں اور ان کے کیمپوں میں ہندو دہشت گردی کی تربیت دی جارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ سجمھوتا ایکسپریس کا دھماکہ ہو، مکہ سجد دھماکہ یا پھر مالیگاؤں کے دھماکے ہندو انتہا پسندوں نے وہاں جاکر بم دھماکے کروائے اور پھر کہا کہ یہ دھماکے اقلیتوں نے کروائے ہیں۔انہوں نے اس سلسلے میں خفیہ رپورٹ کا حوالہ دیا۔

واضح رہے کہ ہندوستان میں مکہ مسجد،سمجھوتا ایکسپریس اور مالیگاؤں دھماکوں کے لئے پہلے مسلمانوں پر الزام لگایا گيا تھا لیکن تحقیقات میں ہندو انتہا پسندوں کے نام سامنے آئے۔

دریں اثنا کانگریس کے ایک سینئر لیڈر منی شنکر ایر نے سشیل کمار شندے کے بیان کا خیرمقدم کرتے ہوئے اس سے پوری طرح اتفاق کیا ہے اور شندے کو اس سلسلے میں مبارک باد بھی دی ہے جبکہ بی جے پی اور آر ایس ایس نے شندے کے بیان کی مذمت کی ہے۔بی جے پی کے ترجمان شاہنواز حسین نے کہا ہے کہ وزیر داخلہ کا بیان غیرذمہ دارانہ ہے اور آر ایس ایس نے کہا ہے کہ ووٹ بینک کی سیاست کے تحت شندے نے یہ بیان دیا ہے۔

تبصرے
Loading...