خلافت ظاہرى سے شہادت تك 4

0 9

184

15_ وقعہ صفين 12_11_

16_ اذہبو انتم الطلقاء ( اسى وجہ سے معاويہ كا شمار طلقاء ميں ہوتا ہے _

17_ شرح ابن ابى الحديد ج 1/ 231 _ تاريخ التواريخ ج 1/ 38_

18_ بعض مورخين نے لكھا ہے كہ جرير كو انہى كى درخواست پر روانہ كيا گيا تھا اگر چہ مالك اشتر نے انہيں روانہ كئے جانے كى مخالفت كى تھى اور يہ كہا تھا كہ جرير كا دل سے جھكاؤ معاويہ كى جانب ہے ليكن اس پر حضرت على (ع) نے فرمايا تھا كہ ان كا امتحان كئے ليتے ہيں پھر ديكھيں گے كہ وہ ہمارى طرف كيسے آتے ہيں _ ملاحظہ ہو مروج الذہب ج 2/ 372 ، وقعہ صفين 27_

19_ وقعہ صفين /19 ، شرح ابن ابى الحديد ج 3 75 ، كامل ابن اثير ج 3/ 276 اور مروج الذہب ج 2/ 372_

20 _ مروج الذہب ج 2/ 372 ، وقعہ صفين 34 ، 31_

21_ شرح ابن ابى الحديد ج 5/ 129_

22_ وقعہ صفين 120_119 _ شرح ابن ابى الحديد ج 3/ 189_

23_ تاريخ ابوالفداء ج 1/ 171 كامل ابن اثير ج 3/ 192_ 277_

24_ وقعہ صفين 32 شرح ابن ابى الحديد ج 3/ 78_

25_ مروج الذہب ج 2/ 354 _ وقعہ صفين 40/ 38_

26_ وقعہ صفين 44 يہاں اس بات كا ذكر بھى ضرورى ہے كہ شرحبيل اور جرير كے درميان سخت عداوت تھي_

27_ ان كى قرابت دارى ميں يزيد بن اسد بُسر اور ارطاء اور عمر بن سفيان بھى شامل تھے_

28_ وقعہ صفين 45_

29_ وقعہ صفين 50_ 46 شرح ابن ابى الحديد ج 2/ 71_

مزید  اچھے خانداني نظام ميں ثقافت کي منتقلي کي آساني
جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.