2022 - 09 - 26 ساعت :
دسته‌بندی نشده

اولاد صالح کی تربیت کے راز

2020-07-10 04

۱۔جہاں تک ممکن ہو آپ اپنے بچوں کے ساتھ نہایت آرام وسکوں کے ساتھ گفتگو کریں اور گفتگو کرتے وقت اچھے الفاظ کو استعمال کیا جائے ۔

۲۔ آپ اپنے بچوں کے سامنے اپنی محبت کااظہار کریں اور ان سے پیار ومحبت کریں ، انہیں آغوش میں لیں ، ان کا بوسہ لیں اور ہمیشہ محبت آمیز نگاہوں سے انہیں دیکھیں ۔

۳۔بچوں کے اعمال کو مد نظر رکھئے اور انہیں سمجھائئے کہ ہمارا یہ عمل اس وجہ سے نہیں کہ ہم تم لوگوں پہ اعتماد نہیں رکھتے بلکہ ہم یہ چاہتے ہیں کہ تم لوگوں کی زیادہ سے زیادہ حفاظت کریں۔ آئندہ کے بارے میں اپنے بچوں سے گفتگو کیجئے ، مشکلات کا سامنا کرنے کے لئے انہیں آمادہ کیجئے ۔

۴۔بچوں کو مسواک کرنے کی جانب مائل کیجئے ۔

۵۔بچوں کے ساتھ بیٹھنے کے لئے انہیں وقت دیجئے تاکہ انہیں یہ محسوس ہوجائے کہ آپ انہیں بہت چاہتے ہیں۔

۶۔اپنے بچوں کے سامنے کتابوں کا مطالعہ کیجئے تاکہ ان کے اندر کتاب پڑھنے کا شوق پیدا ہو اور اس طریقے وہ علمی درجات پہ فائز ہوں۔

۷۔انہیں تلاش وکوشش کی جانب مائل کیجئے ۔

۸۔جدید سوالات ایجاد کرنے کے سلسلے میں ان کی رہنمائی کیجئے ۔

۹۔ادہورے کاموں کو پایہ تکمیل تک پہونچانے میں ان کی مدد کیجئے اور اس امر کو انہیں تعلیم دیجئے ۔

۱۰۔اگر آپ کے بچے گناہوں کی جانب مائل ہیں تو گناہوں کے نتائج ان کے سامنے بیان کیجئے اور اس امر میں ان سے محبت آمیز رفتار سے کام لیجئے ۔

۱۱۔جو کام بچہ انجام دینے پہ قادر ہے اسے انجام دینے کے لئے اس کی رہنمائی کیجئے ۔

۱۲۔اپنے بچوں کے سوالات کا جواب دیجئے اور دینی ومذہبی کتابوں کے ذریعہ دنیاوی اور اخروی زندگی سے انہیں آشنا کیجئے ۔

۱۳۔ اپنے بچوں کو شکرگزار بننے کی تعلیم دیجئے ۔

۱۴۔ اپنے بچوں کو احتمالی مشکلات سے آشنا کیجئے اور ایسی مشکلات کا راہ حل ڈھونڈنے کا طریقہ بھی سکھائیے۔

۱۵۔اپنے بچوں کو لائق وسائشتہ بچے کہہ کر پکارئیے ۔

۱۶۔اپنے بچوں کی بعض نامناسب رفتار اور حرکات کے سامنے صبر سے کام لیجئے کیونکہ ان کے سن وسال کا تقاضا یہی ہے ۔

۱۷۔بچوں کی زندگی کا خیال رکھئے اور انہیں صحیح وسالم غذا کھلانے کی کوشش کیجئے ۔

۱۸۔ موجودہ دور میں جدید تعلیمات سے اپنے بچوں کو آراستہ کیجئے اور روز مرہ کے مسائل سے انہیں آگاہ کیجئے ۔

۱۹۔ بچوں کے سونے اور جاگنے کا وقت معین کیجئے ۔

۲۰۔اسکول یا مدرسہ کے اساتذہ سے رابطہ میں رہئے اور اپنے بچوں کی تعلیم وتربیت کے سلسلے میں ان سے سوال کیجئے ۔

۲۱۔بچوں کی ناسائستہ ونامناسب چال وچلن سے انہیں منع کیجئے

منبع:راھنمای خانوادہ

شجاعت علی

Loading...
  • ×
    ورود / عضویت